چلو کچھ بات کرتے ہیں۔۔۔

35 بار دیکھا گیا

چلو کچھ بات کرتے ہیں۔۔۔Man in Front on Lake

خاموشی کا سحر ٹوٹے۔۔۔

چلو کچھ بات کرتے ہیں۔۔۔

وفاوں کی۔۔۔ جفاوں کی۔۔۔

چلو کچھ بات کرتے ہیں۔۔۔

بکھرے کی۔۔۔ بچھڑنے کی۔۔۔

بکھر کر پھر سمٹنے کی۔۔۔

بچھڑ کر پھر سے ملنے کی۔۔۔

میں تم سے دور ہو جاوں۔۔۔

تمہیں جب بھی طلب ہو مجھ سے ملنے کی۔۔۔

کسی ویران ساحل پر کھڑے ہو کر۔۔۔

مجھے آواز دے دینا۔۔۔

تیری پلکوں کی چوکھٹ پر جو دستک دے۔۔۔

سمجھ لینا کہ وہ میں ہوں۔۔۔

(شاعرہ: ت ع)

اس پوسٹ کے بارے میں اپنے احساسات ہم تک پہنچائیں یہاں تبصرہ کریں

تبصرے بذیعہ فیس بک۔۔۔۔

7 تبصرے

تبصرہ کرتے وقت مت بھولئے کہ آپ بہت اچھے/اچھی/درمیانےقسم کے اچھے/ ہیں

error: خدا کا خوف کھاو بھائی، کیا کرنا ہے کاپی کر کے۔۔۔
%d bloggers like this: