درخواست

112 بار دیکھا گیا

جو گزروں کبھی میں تمہارے خیالوں میں۔۔۔untitled

تم میرا ہاتھ تھام لینا۔۔۔

میری آنکھوں میں اپنا چہرہ ڈھونڈھ لینا۔۔۔

خاموشی سے، اپنے سینے سے لگا لینا۔۔۔

میری دھڑکن میں اپنا نام سن لینا۔۔۔

قریب اپنے بٹھا کر۔۔۔

الفت کی دو باتیں کر لینا۔۔۔

میرا حال پوچھ لینا۔۔۔

اپنا حال سنا دینا۔۔۔

کچھ قدم میرے ساتھ چل لینا۔۔۔

تحفے میں اک مسکان دے دینا۔۔۔

روک لینا اس پل کو۔۔۔

اک لمحہ میرے نام کر دینا۔۔۔

(شاعرہ: ت ع)


اس پوسٹ کے بارے میں اپنے احساسات ہم تک پہنچائیں یہاں تبصرہ کریں

تبصرے بذیعہ فیس بک۔۔۔۔

3 تبصرے

تبصرہ کرتے وقت مت بھولئے کہ آپ بہت اچھے/اچھی/درمیانےقسم کے اچھے/ ہیں

error: خدا کا خوف کھاو بھائی، کیا کرنا ہے کاپی کر کے۔۔۔
%d bloggers like this: